Category Archives: International Press Releases

جاری شدہ نیا انڈیکس چین کی بہتر شمولیتی مالیاتی خدمات کو ظاہر کرتا ہوا

بیجنگ، چین، 17 اکتوبر 2018ء/سنہوا-ایشیانیٹ/– سی سی بی-سنہوا انکلوزِو فائنانس-ایس ایم ای انڈیکس کا افتتاح 11 اکتوبر کو بیجنگ میں کیا گیا تھا، جس نے 2018ء کی دوسری سہ ماہی میں چین کے چھوٹے اور نچلے حجم کے اداروں (ایس ایم ایز) کے لیے مالیاتی خدمات کی بہتر دستیابی اور معیار کو ظاہر کیا۔

سی سی بی-سنہوا انکلوزِو فائنانس-ایس ایم ای انڈیکس مشترکہ طور پر چائنا کنسٹرکشن بینک (سی سی بی) اور چائنا اکنامک انفارمیشن سروسز (سی ای آئی ایس) نے سنہوا نیوز ایجنسی کے تحت مرتب کیا ہے، اور اس میں چار ذیلی انڈائسز ، فائنانسنگ انڈیکس، سروس انڈیکس، ڈیولپمنٹ انڈیکس اور بزنس انڈیکس شامل ہیں ۔

یہ چینی مالیاتی نظام کی صلاحیت کے عکاسی کرتے ہیں کہ ایس ایم ایز کو نسبتاً موزوں قیمتوں پر باسہولت خدمت فراہم کی جائیں اور ایس ایم ایز کے لیے شمولیتی مالیات کی صورتِ حال اور ترقیاتی درجے کو چلانے کو بیان کیا جائے، ایس ایم ایز کی شمولیتی مالیات کے لیے “بار پیما” اور “قطب نما” تخلیق کر رہے ہیں۔

انڈیکس نے اشارہ کیا کہ ایس ایم ایز کے لیے چین کی مالیاتی قیمت حالیہ چند سالوں میں اتار چڑھاؤ کے ساتھ مستحکم ہو چکی ہیں۔ رحجان 2015ء کی نسبتاً بلند سطحوں کے مقابلے میں  2016ء میں نیچے دکھائی دیا، اور 2017ء کی دوسری سہ ماہی کے بعد کچھ بہتر ہوتے ہوئے اوپر دیکھا گیا جس میں چوتھی سہ ماہی میں 107.63  کی بلند ترین سطح تک جا پہنچا۔ 2018ء میں مالیاتی پرائس انڈیکس برائے ایس ایم ایز 2017ء کی آخری سہ ماہی سے نیچے چلا گیا۔

2018ء کی دوسری سہ ماہی میں ایس ایم ایز کے لیے ڈیولپمنٹ انڈیکس اور بزنس انڈیکس بالترتیب 55.41 اور 54.80 پر برقرار رہا، دونوں 50 کے بنیادی معیار سے زیادہ رہے اور دونوں شعبوں میں بڑھتی ہوئی حالت کو ظاہر کر رہے ہیں۔

لیو ژینگرونگ، نائب صدر اور سیکریٹری جنرل سنہوا نیوز ایجنسی نے کہا کہ سنہوا شمولیتی مالیات اور مقامی تجربے و کامیابیوں کی ملک بھر میں عملی بہتری کے لیے چین کی پالیسیوں اور اقدامات کی خبریں پیش کرنا جاری رکھے گا۔ سنہوا اپنے تمام میڈیا وسائل اور خصوصی تھنک ٹینک ٹیموں، جیسا کہ قومی مالیاتی انفارمیشن پلیٹ فارم سنہوا فائنانس اور قومی کریڈٹ انفارمیشن پلیٹ فارم سنہوا کریڈٹ، کو بھی سی سی بی جیسے مالیاتی اداروں کے لیے خدمات کی فراہمی پر استعمال کرے گا اور چین کی شمولیتی مالیات کی  ترقی میں حصہ ڈالے گا۔

تیان گولی، چیئرمین سی سی بی نے کہا کہ شمولیتی مالیات کے شعبے میں کئی نظری و عملی مسائل حل ہونا باقی ہیں، اور سی سی بی-سنہوا فائنانس-ایس ایم ای انڈیکس  معاشرے کے تمام شعبوں کو استحکام دیتے ہیں جیسا کہ بینکوں اور پیشہ ورانہ میڈیا کو، کہ وہ شمولیتی مالیات کی کارکردگی میں چین کے لیے بار پیما تخلیق کریں اور شمولیتی مالیات کی مصنوعات، نمونوں اور میکانزم میں جدت کے لیے فیصلہ سازی کی مدد فراہم کریں۔

ذریعہ: چائنا اکنامک انفارمیشن سروس (سی ای آئی ایس)

تصویری اٹیچمنٹس کے لنکس:
http://asianetnews.net/view-attachment?attach-id=322139

شرمین عبید چنائے نے ٹالبرگ فاؤنڈیشن کا ایلیاسن گلوبل لیڈرشپ انعام جیت لیا

چنائے یہ معروف اعزاز حاصل کرنے والی پہلی پاکستانی ہیں

نیو یارک، 17 اکتوبر 2018ء/پی آرنیوزوائر/– دو مرتبہ کی اکیڈمی ایوارڈ یافتہ فلم ساز، صحافی اور کارکن شرمین عبید-چنائے نے اپنی غیر معمولی قیادت اور دلیرانہ، امید پرستانہ محرّکات، آفاقی اقدار میں پیوست جڑیں رکھنے والے اور رسائی، تصوّر اور اثر انگیزی میں بنیادی طور پر عالمی کام کی بدولت معروف 2018ء ایلیاسن گلوبل لیڈرشپ اعزاز جیت لیا ہے، جس کا اعلان آج نیو یارک میں ٹالبرگ فاؤنڈیشن نے کیا۔ بلاشبہ، چنائے پہلی پاکستانی ہیں جنہوں نے یہ معروف اعزاز حاصل کیا۔

ایلیاسن گلوبل لیڈرشپ انعام جیتنے پر شرمین عبید-چنائے نے کہا کہ “مجھے ایک ایسے وقت پر ایلیاسن گلوبل لیڈرشپ انعام وصول کرتے ہوئے خوشی محسوس ہو رہی ہے جب معاشرے کو آئینہ دکھانے کی بھاری قیمت سامنے آ رہی ہے۔ اپنے ساتھیوں کو محض سچ بولنے پر دنیا بھر میں قید و بند کی صعوبتیں سہتے اور قتل ہوتا دیکھنے کے ساتھ، ہمیں ثابت قدم رہنے کی ہمت رکھنے کی ضرورت ہے۔ میں اس امید کے ساتھ مشکل داستانیں بیان کرتی رہوں گی کہ ان سے جو گفتگو شروع ہوگی وہ ہمارے دنیا کو دیکھنے کے زاویے کو تبدیل کرے گی۔”

ایلن سٹوگا، ٹالبرگ فاؤنڈیشن چیئرمین نے کہا کہ “یہ رہنما، کہیں مختلف تناظر میں کام کرتے ہوئے، اس سے یکساں وابستگی رکھتے ہیں: دنیا جیسی ہے اسے بہتر بنانا اور جیسا اسے ہونا چاہیے اس کے قریب لے جانا۔” انہوں نے گفتگو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ “مجموعی طور پر ہم اسے آج دنیا کو درکار قیادت کی اقسام کے بارے میں انتہائی مثبت اور طاقتور بیان سمجھتے ہیں ۔”

2005ء میں قائم ہونے والے اور 2014ء سے موجودہ صورت پانے والے ایلیاسن گلوبل لیڈرشپ انعام کے فاتحین بڑے پیمانے پر ایک آزادانہ، آن لائن عمل کے ذریعے  نامزد ہوتے ہیں اور آخر میں افراد کی ایک جیوری سے منتخب ہوتے ہیں جو بذات خود مختلف ممالک اور شعبہ جات سے تعلق رکھنے والے تسلیم شدہ رہنما ہوتے ہیں۔ ایلیاسن انعامات اسٹاوروس نیارکوس فاؤنڈیشن (این ایس ایف) کی تائید کے حامل ہیں۔ 2018ء کے فاتحین میں شامل ہیں:

شرمین عبید-چنائے؛ اپنی داستان گوئی کی عالمی معیار کی مہارتوں کے لیے تاکہ عالمی حاضرین کی توجہ پسماندہ طبقوں کو متاثر کرنے والے ان مسائل پر مبذول ہو اور اذہان کو بدلے اور قانون سازی پر اثر ڈالے۔

رافیل یوستے؛ کولمبیا یونیورسٹی میں بایولوجیکل سائنسز کے پروفیسر، معروف نیوروسائنٹسٹ، یو ایس برین انیشی ایٹو (2013ء) کو متاثر کرنے والے اور اخلاقی حدود کے اندر جدید نیوروسائنس اور مصنوعی ذہانت پر تحقیق کے معروف حامی ہیں۔

امام عمر کوبائن لایاما، صدر سینٹرل افریقن اسلامک کمیونٹی؛ کارڈینل دیودوے نزاپالینگا، آرچ بشپ بانگوئی؛ اور نکولس گوریکویامے-گبانگو، صدر ایونجلیکل الائنس آف دی سینٹرل افریقن ری پبلک؛ پلیٹ فارم دے کنفیشنز ریلیجیسز دی سینٹرافریق (پی سی آر سی) کے بانیان جو ان کے ملک اور خطے میں پھیلنے والے تشدد کے دوران امن، مفاہمت اور سماجی وابستگی چاہتے ہیں۔ اس سال کے فاتحین کو 15 نومبر 2018ء کو میکسیکو سٹی میں انسٹیٹوٹو ٹیکنالوجیکو آٹونومو ڈی میکسیکو (آئی ٹی اے ایم) میں عوامی مکالمے میں اعزازات دیے جائیں گے۔ بلاشبہ فاتحین کا انتخاب 130 ممالک سے تعلق رکھنے والے اور درجنوں شعبہ جات، عہدوں اور مقاصد  کے حامل 825 نامزدگان میں سے کیا گیا تھا۔ شرمین عبید-چنائے کا انتخاب کرتے ہوئے جیوری نے اپنی فلم سازی کے ذریعے اذہان کو تبدیل کرنے میں ان کی بڑھتی ہوئی ثابت قدم اور مؤثر قیادت کا ہی نہیں، بلکہ حقیقتوں کو تبدیل کرنے کے لیے کام کرنے کا بھی حوالہ  دیا جو 21 ویں صدی میں ناقابل قبول ہونی چاہئیں۔

مزید معلومات کے لیے ملاحظہ کیجیے:

www.socfilms.com

http://www.facebook.com/socfilms

https://eliassongloballeadership.org/

ٹالبرگ فاؤنڈیشن کے بارے میں

ٹالبرگ فاؤنڈیشن، جس کے دفاتر اسٹاک ہوم اور نیو یارک میں واقع ہیں، لوگوں کو سوچنے پر اکسانے– اور یوں ان عالمی مسائل پر مختلف قدم اٹھانے کا ہدف رکھتی ہے جو ان کے حال اور مستقبل کی صورت گری کرتے ہیں۔ مزید معلومات کے لیے رابطہ کیجیے prize@tallbergfoundation.org  ۔

www.tallbergfoundation.org ،  www.eliassongloballeadership.org

اسٹاوروس نیارکوس فاؤنڈیشن (ایس این ایف) کے بارے میں

اسٹاوروس نیارکوس فاؤنڈیشن دنیا کی معروف نجی، بین الاقوامی انسان دوست انجمنوں میں سے ایک ہے جو فنون و ثقافت، تعلیم، صحت و کھیل اور سماجی بہبود کے شعبوں میں گرانٹس دیتی ہے۔ 1996ء سے فاؤنڈیشن دنیا بھر کے 124 ممالک کی غیر منافع انجمنوں کو 4,000 سے زائد گرانٹس کے لیے 2.6 ارب ڈالرز سے زيادہ سپرد کر چکی ہے۔

ایس این ایف دنیا بھر میں ایسی انجمنوں اور منصوبوں کو فنڈز دیتا ہے جو معاشرے کے لیے بڑے پیمانے پر وسیع، پائیدار اور مثبت اثر حاصل کرنا چاہتے ہیں، اور مضبوط قیادت اور مستحکم انتظامیہ کا مظاہرہ کرتے ہیں۔ فاؤنڈیشن ایسے منصوبوں کو بھی سہارا دیتی ہے جو سرکاری-نجی شراکت داری تشکیل دینے کو سہولت دیتے ہیں جو عوامی بہبود کی خدمات کے لیے ایک مؤثر طریقہ ہے۔

www.SNF.org

‫قومی سطح پر معروف ای-کامرس نمائش انٹرنیشنل ای-بزنس ایکسپو 2018ء اکتوبر میں ہانگژو، چین میں منعقد ہوگی

ہانگژو، چین، 17 اکتوبر 2018ء/پی آرنیوزوائر/– انٹرنیشنل ای-بزنس ایکسپو 2018ء ہاگژو، چین میں علی بابا، ایمیزن، وال مارٹ اور نیٹ ایز جیسے بڑے ای-کامرس ادارے ایونٹ میں شرکت کریں گے۔ کلاؤڈ اکنامکس ماہر جو وینمین اور دیگر ای-کامرس صنعتی ماہرین نمائش میں شرکت کریں گے اور تقاریر کریں گے۔

https://photos.prnasia.com/prnvar/20181017/2270510-1

قومی سطح پر معروف ای-کامرس نمائش اکتوبر میں ہانگژو، چین میں منعقد ہوگی

https://photos.prnasia.com/prnvar/20181017/2270510-1

چین کے خوبصورت شہر ہانگژو نے 2016ء میں جی20 اجلاس کی میزبانی کی۔ 20 سے 22 اکتوبر 2018ء تک پانچویں چین (ہانگژو) انٹرنیشنل ای-کامرس ایکسپو اسی نمائشی ہال ہانگژو انٹرنیشنل ایکسپو سینٹر میں منعقد ہوگی۔ ایکسپو دلچسپ تقریبات کے ایک سلسلے میں تقسیم ہے جیسا کہ موضوعاتی کانفرنس، صنعتی فورم، چھ نمائشی ہالز اور ای-کامرس یوم جشن۔ نمائش میں 100,000 سے زیادہ افراد کی آمد متوقع ہے۔

نمائش ایک بین الاقوامی ای-کامرس مرکز اور بین الاقوامی کھپت کے لیے مرکزی شہر تخلیق کرنے سے وابستہ ہے۔ ڈجیٹل اکانمی اور نیو ریٹیل جیسے موضوعات پر توجہ کرتے ہوئے نمائش درآمدات اور کھپت کے ساتھ ڈجیٹل اکانمی کے مکمل ملاپ کو پورا کرے گی۔ نمائش کا موضوع نیو ریٹیل، نیا کاروبار، نئی کھپت ہے۔ عملی مظاہروں، تجربات شیئر کرنے اور دیگر طریقوں کے ذریعے نمائش روایتی کاروباروں کی تبدیلی اور مارکیٹ کھپت کو بڑھانے، ای-کامرس اور ریٹیل صنعت کی ترقی کے فروغ، اور ملک اور بیرون ملک وسائل کو ملانے کے لیے ایک مؤثر ای-کامرس پبلک سروس پلیٹ فارم تشکیل دینے کے لیے مذاکروں کی میزبانی کرے گی۔

‘ای بی ای چائنا’ اس ایکسپو کا برانڈ نیو امیج ہے۔ مستقبل میں یہ ایکسپو عالمی منظرنامے پر اہم کردار ادا کر سکتی ہے۔ نمائش تین حصوں میں تقسیم ہوگی: فورم، نمائش اور کانفرنس۔ 30,000 مربع میٹرز کا نمائشی علاقہ اور 1,000 بوتھس کی موجودگی متوقع ہے۔ یہ 100 مقامی و بین الاقوامی صنعتی ماہرین، 200 معروف ای-کامرس اور ریٹیل انٹرپرائزز اور 500 ریٹیل کمپنیوں کو مدعو کرے گا۔ ایکسپو ایک نیا سنگ میل ہوگا جس کو پہلے کبھی نہیں دیکھا گیا۔ ہانگژو، چین میں اکتوبر میں ای-کامرس کے نئے مواقع دیکھیں۔

تصویر – https://photos.prnasia.com/prnh/20181017/2270510-1

‫گری کا توانائی بچانے والا سی اے سی جی ایم وی ایکو کینٹن میلے میں پسندیدہ، جو ماحول دوست حل پیش کرتا ہے

گوانگژو، چین، 16 اکتوبر 2018ء/سنہوا-ایشیانیٹ/- – 16 اکتوبر کو 124 ویں چائنا امپورٹ اینڈ ایکسپورٹ فیئر (یا کینٹن میلے) کے دوسرے روز چین میں گھریلو آلات بنانے والے معروف ادارے گری الیکٹرک اپلائنسز انکارپوریٹڈ آف ژوہے نے جی ایم وی ایکو کا پروڈکٹ لانچ کیا، جو اس کے نئی جنریشن کے توانائی بچانے والے کمرشل ایئر کنڈیشنر ہیں۔ وی آر ایف (ویریئبل ریفریجرنٹ فلو) یونٹ کی اس نئی قسم نے ملک اور بیرون ملک کے خریداروں اور نمائش کنندگان کی توجہ مبذول کروائی کیونکہ یہ “50 فیصد بجلی بچت” پیش کرتی ہے، جو توانائی کے ضیاع کو بڑی حد تک کم کرتی اور دنیا کے لیے ایک ماحول دوست طرز زندگی لاتی ہے۔

دنیا کی اوّلین اور رہنما ٹیکنالوجی توانائی بچت انقلاب کو فروغ دینے میں مدد دیتی ہوئی

اجراء کے موقع پر جناب ژاؤ گولیانگ، اسسٹنٹ جی ایم گری اوورسیز سیلز کمپنی نے جی ایم وی ایکو کو تفصیل سے متعارف کروایا۔

انہوں نے کہا کہ اس نئی پروڈکٹ کی “50 فیصد بجلی بچت” کا راز اس کے انورٹر اور ویریئبل والیئم ٹیکنالوجی میں ہے، جسے گری نے تخلیق کیا تھا اور دنیا بھر کی رہنمائی کی۔

چینی مارکیٹ کے بگ ڈیٹا سروے کے مطابق گھریلو سینٹرل ایئر کنڈیشنرز چینی صارفین کے استعمال کے 60 فیصد دورانیے میں کم لوڈ (30 فیصد سے کم) پر چلتے ہیں ۔ البتہ گری کا انورٹر اور ویریئبل ٹیکنالوجی کم از کم آؤٹ پٹ کو گھٹا کر مؤثریت کو بہتر بنا سکتا ہے۔ کم از کم کولنگ گنجائش درج شدہ کا 5 فیصد تک ہو سکتی ہے، جو روایتی وی آر ایف یونٹ کے مقابلے میں 42 فیصد کم ہے، اور اس کی توانائی مؤثریت 3.55 تک پہنچ سکتی ہے۔ جب لوڈ کی شرح 10فیصد ہے، توانائی مؤثریت 4.25 تک بڑھ جاتی ہے، 130 فیصد زیادہ روایتی وی آر ایف یونٹ کے مقابلے میں۔ ماحول دوست ترقی کے لیے ایسی جدید توانائی بچت ٹیکنالوجیز  کے ساتھ گری نے حقیقت “50 فیصد بجلی بچت” کو حاصل کیا۔

ایک سال قبل، 27 ستمبر کو، گری کے “مختلف والیم سوئچنگ کمپریسر ٹیکنالوجی کی بنیاد پر انتہائی مؤثر گھریلو وی آر ایف یونٹ” کو ماہرین کی جانب سے دنیا میں اپنی نوعیت کی پہلے قسم قرار دیا گیا تھا۔ اس وقت یہ پروڈکٹ 2 بین الاقوامی پیٹنٹس کے ساتھ ساتھ 36 قومی ایجادات پیٹنٹس کے لیے درخواست دے چکی ہے، جبکہ 19 اسے دے دیے گئے ہیں۔

“ہمارے 16 سالہ پیشہ ورانہ تعاون اور گری کے ساتھ اچھے تعلقات کے پس پردہ وجوہات مندرجہ ذیل ہیں: اچھا معیار، جدید اور پیش پیش ڈیزائن، توانائی بچت اور ماحول دوستی۔ 50 فیصد توانائی بچت کے ساتھ میرا ماننا ہے کہ نئی جنریشن کے جی ایم وی ایکو مارکیٹ میں فروخت کے اعتبار سے نمبر 1 بن جائیں گے۔ ہم نے خود بھی پروڈکٹ کے بڑے آرڈرز دیے ہیں۔ ہمیں اعتماد بھی ہے کہ گری کی طرف سے زیادہ سے زيادہ خوبصورت مصنوعات بنائی جائیں گے، اور دنیا کی جانب سے پسند کی جائیں گی،” جناب وتالی شوریگا، یوکرین کی جنرل مینیجر اسٹیپ ٹریڈنگ کمپنی ایل ایل سی نے کہا۔

گری کے تین برانڈز جیسا کہ گری، کنگ ہوم، ٹوسوٹ کی دیگر اہم مصنوعات “نئی توانائی، نئی ٹیکنالوجی، نیا ریفریجرنٹ” کے موضوع کے ساتھ بھی میلے کی اہم جھلکیاں ہیں۔

ماحول دوست اور جدت طرازی سے تحریک پاتی ترقی کو فروغ دیتے ہوئے: ساختہ چین، دنیا کی پسند

گری نے 1991ء میں سینٹرل ایئر کنڈیشننگ کے لیے آر اینڈ ڈی انسٹیٹیوٹ بنایا تھا اور یہ چین میں ایسی پروڈکٹ کی آر اینڈ ڈی، پیداوار اور فروخت کے لیے بنائے گئے اولین اداروں میں سے ایک تھا۔ آزادانہ جدت طرازی کی بدولت گری وی آر ایف یونٹس کے شعبے میں مستقل کامیابیاں سمیٹ چکا ہے اور ماحول دوست ترقی کے راستے پر آگے بڑھ رہا ہے۔

محترمہ ڈونگ منگژو، چیئرپرسن گری الیکٹرک اپلائنسز اور ایسے ترقیاتی فلسفے کی ماہر کو ستمبر 2014ء میں اقوام متحدہ کی جانب سے باضابطہ طور پر “ماحول دوست شہری ترقی منصوبے کی پیغام رساں” مقرر کیا گیا تھا۔  “انٹرپرائزز بقاء کے لیے نہیں بلکہ عہد کو تبدیل کرنے کے لیے ہیں۔ یہ ہماری ذمہ داری ہے۔ ہم صرف چین میں ہی نہیں بلکہ دنیا میں بھی ٹیکنالوجیز کے ساتھ زندگی کے نئے طریق تخلیق کرنے کی کوشش گے، ماحول دوست ترقی کے نئے طریقے۔” محترمہ ڈونگ نے کہا۔

ذریعہ: گری الیکٹرک اپلائنسز  انکارپوریٹڈ آف ژوہے

‫ژیجیانگ سیانجوکی ماحول دوست ترقی کے ساتھ “خوبصورت چین” کے کاؤنٹی ماڈل کی تخلیق

سیانجو، چین، 15 اکتوبر 2018ء/سنہوا-ایشیانیٹ/– سی پی سی سیانجو کاؤنٹی کمیٹی کے پبلسٹی ڈپارٹمنٹ کے مطابق 12 سے 14 اکتوبر تک چین کا تیسرا گرین ڈیولپمنٹ سیانجو فورم سیانجو کاؤنٹی، ژیجیانگ صوبے میں منعقد ہوا۔

سیانجو مشرقی چین میں ایک نسبتاً دور دراز پہاڑی علاقہ ہے۔ آج مقامی افراد کو ان کے ماحول دوست طرزِ زندگی کا صلہ دیا جا سکتا ہے۔ مکین پیدل چلنے کا انتخاب کرکے، سرکاری سائیکلیں چلا کر یا بس کے ذریعے سفر کرکے “گرین کوائنز” کی مخصوص تعداد حاصل کر سکتے ہیں، جنہیں اخراجات، روزمرہ خرچوں، خیراتی عطیات وغیرہ کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے۔ ایک “گرین کوائن” 1 رینمنبی کے برابر ہے۔

اس قسم کا صحت مندانہ اور ماحول دوست طرزِ زندگی سیانجو میں ہر طرف دیکھا جا سکتا ہے۔ یہی نہیں بلکہ سیانجو کی موجودہ صنعتی ترقی بھی ماحول دوست صنعت سے قریبی تعلق رکھتی ہے۔

سیانجو کاؤنٹی کے جنگلات کے پھیلاؤ کی شرح 79.6 فیصد ہے۔ وہ مقام جہاں تانگ خاندان کے دور کے شاعر لی بائی کے “ایک سپنے میں بلند ہونے والے تیانمو پہاڑ” کا ذکر ہے وہ تیانمو پہاڑ سیانجو میں واقع ہے، اور “وہ جگہ جہاں زندۂ جاوید رہتے ہیں” سمجھا جاتا ہے۔ طویل عرصے سے سیانجو بہترین ماحول رکھتا ہے، لیکن اقتصادی ترقی کے لحاظ سے سیانجو ژیجیانگ میں ایک ترقی یافتہ کاؤنٹی نہیں ہے۔  اب تک ژیجیانگ نے  صرف اسے کاؤنٹی کی سطح کے گرین ڈویلپمنٹ ریفریجریشن پائلٹ کی حیثیت سے منتخب کیا ہے۔ حکومت، اداروں اور عوام کے ساتھ اپنے اشتراک کے ذریعے اس نے چین کے لیے ماحول دوست ترقی، خوش حال زندگی اور مستحکم ماحول کے ساتھ “خوبصورت چین” کاؤنٹی ماڈل تلاش کیا ہے۔

سیانجو روایتی دیہات سے مختلف ہے۔ یہ نسبتاً ایک قدرتی پارک کی طرح ہےجہاں ماحولیات، زندگی اور معیشت باہمی ہم آہنگی سے ترقی پاتی ہیں۔

سیانجو کی اقتصادی ترقی کی “ماحول دوستی” نے عملی طور پر برتری حاصل کرلی ہے۔ مثال کے طور پر روایتی ادویات سازی کی صنعت کے لیے ایک اچھی بنیاد فراہم کرتے ہوئے سیانجو نے کم ٹیکنالوجی مواد، کم پیداواری صلاحیت اور شہری علاقوں میں پھیلی ہوئی تقسیم کاری کی حامل بیشتر ادویات سازی کے ادارے بند کردیے۔ برقرار رکھے گئے اداروں کو مکمل طور پر ایک اکنامک ڈیولپمنٹ زون میں منتقل کردیا گیاا ور مصنوعات کو بھی خام مال کی رسد سے لے کر پیٹنٹ ادویات کی پیداوار تک ترقی دی گئی، یوں جدید ادویات اور بایومیڈیسن کو تبدیل کیا گیا۔ اسی دوران سیانجو نے بہترین صحت، شاندار سیاحت اور عظیم ثقافت کی تین “دس ارب صنعت” کو متحرک انداز میں ترتیب دیا، تاکہ ماحول دوستی اور اعلیٰ معیار کی جانب اقتصادی ترقی کے لیے ترویج دی جائے۔

قدیم پیداواری استعداد کے خاتمے اور سائنسی و ٹیکنالوجی جدت کو استحکام دے کر سیانجو کی ہائی-ٹیک صنعت کی اضافی قدر صنعت کی کُل قدر کے نصف تک پہنچی اور ماحول دوست صنعت کاؤنٹی کے گزشتہ سال کے جی ڈی پی کا 83 فیصد رہی۔

“قومی سطح کی ماحول دوست کاؤنٹی”، “قومی سطح کے خوبصورت دیہی پائلٹ کاؤنٹی کی معیار بندی”، “چین کی تفریحی زراعت اور دیہی سیاحت کی عملی کاؤنٹی”، “چین کے بہترین دیہی اقتصادی سیاحت و تعطیلات کے مقام” ۔۔۔ سیانجو کی ساکھ حالیہ سالوں میں ایک امتیازی ماحول دوست ترقی کے پس منظر کے ساتھ بڑھی ہے۔

“گرین کوائن” سسٹم کے ساتھ ساتھ آجکل سیانجو کے شہریوں نے ایک “ماحول دوست اتفاق” بھی طے کیا ہے اور ماحول دوست کھپت، توانائی حفاظت اور ماحولیاتی تحفظ، سی ڈی-روم آپریشنز، ماحول دوست سفر، کوڑے کی چھانٹی میں متحرک انداز میں کام کر رہے ہیں۔ ماحول دوست ترقی کے اقدامات سیانجو میں ایک فیشن بن چکے ہیں۔

“ماحول دوست کاؤنٹی-تعمیر اور سبز ترقی کا راستہ اختیار کرنا قومی ماحول دوستی تہذيبی تعمیر کے نفاذ کی ہی ضرورت نہیں، بلکہ فیری ہاؤسز کی تعمیر کے مرحلے کے لیے تاریخی انتخاب بھی ہے۔” لی ہونگ، سیکرٹری سیانجو کاؤنٹی پارٹی کمیٹی نے کہا کہ مستقبل میں سیانجو ایک زبردست اور کھلا پہاڑی مقام، ایک ماحول دوست اقتصادی پہاڑی مقام، ایک کاؤنٹی ثقافتی پہاڑی مقام، ایک سازگار اور خوش حال پہاڑی مقام بننے کے لیے ہر ممکن کوشش کرے گا۔

چائنا ایکولوجیکل سویلائزیشن ریسرچ اینڈ پروموشن ایسوسی ایشن کے ذمہ دار فرد نے کہا کہ سیانجو نے حالیہ چند سالوں میں  ایک ماحول دوست معیشت کے قیام اور ماحول دوست بہبودکے فروغ پر توجہ رکھی ہے۔ یہ ایک پائیدار اور آگے بڑھائے جانےکے قابل تلاش ہے جو چین کو ماحول دوست ترقی اور دیہی تجدید کی حکمت عملی کے تصور کو نفاذ کرنے کے لیے ایک نمونہ فراہم کرے گی۔

ذریعہ: سی پی سی سیانجو کاؤنٹی کمیٹی کا پبلسٹی ڈپارٹمنٹ

تصویری اٹیچمنٹس کے لنکس:
http://asianetnews.net/view-attachment?attach-id=321932

Speakers NA, KP discuss overall political, economic situation

Speaker Khyber Pakhtunkhwa Assembly Mushtaq Ghani called on Speaker National Assembly Asad Qaiser in Islamabad on Tuesday and discussed overall political and economic situation.

In his remarks, the speaker National Assembly stressed that the provinces will have to take concrete steps along with the federal government to steer the country out of current challenges.

Mushtaq Ghani said all political parties in the parliament to play their part to put the country on the track of development.

Source: Radio Pakistan