دنیا کا سب سے بڑا تجارتی میلہ

“سخت حالات میں ترقی کی ترغیب”

گوانگ چو، چین، 28 مئی 2012ء/پی آرنیوزوائر-ایشیا/–

یورپ اور امریکہ میں مشکل مالی حالات و ملازمت مارکیٹ کی صورتحال نے مئی کے اوائل میں چین میں ہونے والے دنیا کے سب سے بڑے تجارتی میلے، 111 ویں کینٹن میلے میں تجارت پر اثر ڈالا، لیکن یہ سست روی توقعات سے کہیں کم تھی۔

 اس کے باوجود ایونٹ نے چند ریکارڈ توڑ اعداد و شمار پیش کیے: 4 مئی کے مطابق 213 ممالک اور خطوں کو دو لاکھ 10 ہزار خریداروں نے شرکت کی، جو 2011ء میں 110 ویں اور 109 ویں سیشنز کے مقابلے میں بالترتیب 0.23 فیصد اور 1.23 تک اضافہ ہے۔

یورپ اور امریکہ میں مشکل حالات میلے میں ہونے والے برآمدی معاہدوں کی کل قدر سے ظاہر تھے۔ یہ سال-بہ-سال 2.3 فیصد کمی کے ساتھ 36.03 ارب امریکی ڈالرز تک پہنچ گئے ہیں ، جو گزشتہ سال کے سیشن برائے خزاں سے 4.8 فیصد کم ہے۔ امریکہ اور یورپ کا تجارتی حجم بالترتیب 8.1 فیصد اور 5.6 فیصد کم ہوا۔

دوسری جانب مثبت پہلو یہ رہا کہ ابھرتی ہوئی مارکیٹوں – جیسا کہ بھارت، برازیل اور روس – میں قائم اداروں کے ساتھ ہونے والے برآمدی معاہدوں کی تعداد میں 4.1 فیصد کا حوصلہ افزا اضافہ دیکھنے میں آیا۔ افریقی ممالک کے ساتھ تجارت کے حجم میں بھی 13.5 کا تیزی سے اضافہ ہوا۔ یہ اعداد و شمار ابھرتی ہوئی مارکیٹوں کی دنیا کے نئے ستاروں کی حیثیت سے ابھرنے کو  نمایاں کرتے ہیں، اور کینٹن میلہ کو عالمی درآمدات و برآمدات میں موثر ترین تجارتی مواقع میں سے ایک کی حیثیت سے ظاہر کرتے ہیں جو ایک مشکل وقت میں بھی ترقی کے لیے کاروباری مواقع پیش کرتا ہے۔

میلے کا دورہ کرنے والے کا تجربہ بھی وسیع پیمانے پر مثبت رہا۔

فن لینڈ کے ایک تجارتی ادارے کے خریدار   کرستریان ہومکوست نے کہا کہ “کینٹن میلے میں شرکت کا یہ میرا پہلا موقع ہے، اس نے نئے فراہم کنندگان کی تلاش کے لیے کئی مقامات پر جانے سے میرا وقت بچا لیا ہے۔ دنیا بھر میں مالیاتی بحران کے اس دور میں یہ کہنا مشکل ہے کہ اس کے میرے کاروبار پر تیر بہدف اثرات مرتب ہوں گے۔ لیکن کینٹن میلہ تجارتی کاروباری کرنے کے لیے بہتر خیالات فراہم کرتا ہے اور ہمیں زیادہ مسابقت خیز بناتاہے۔”

برازیل سے تعلق رکھنے والے حسن البزری نے کہا کہ “میرے خیال میں عالمی معیشت کساد بازاری کا سامنا کر رہی ہے، لیکن ہمارے لیے یہ ترقی کا ایک اچھا موقع ہے۔”

اکتوبر میں کینٹن میلے کے اگلے مرحلہ کے آغاز کے ساتھ ایونٹ منتظمین کی نظریں تمام بین الاقوامی خریداروں کا پرتپاک خیرمقدم کرنے پر مرکوز ہیں۔ تجارتی میلے کے عملے کے ایک رکن نےکہا کہ “جہاں بھی لوگ ہیں، وہاں کاروباری مواقع ہیں، اور امید کی ایک کرن موجود ہے۔”

مزید معلومات کے لیے ملاحظہ کیجیے: http://www.cantonfair.org.cn/en/index.asp

ذریعہ: چائنا فارن ٹریڈ سینٹر (CFTC)

رابطہ: جناب و سیاؤینگ، +86-20-8913 8628، xiaoying.wu@cantonfair.org.cn

Leave a Reply