دنیا بھر کی پسند: 2030ء تک 40 فیصد زیادہ فوسل ایندھن جلائیں یا ہوا کے ذریعے عالمی بجلی کو تقویت دیں

برسلز، یکم جون 2012ء/پی آرنیوزوائر/–

– 15 جون کو ہوا کا عالمی دن –

2030ء تک دنیا کی بنیادی توانائی کھپت میں 40 فیصد تک اضافے کی توقع ہے۔ 20 سالوں میں دنیا کی آبادی موجودہ 7 ارب سے بڑھ کر 8 ارب سے بھی زیادہ ہو جائے گی۔ بڑھتے ہوئے فوسل ایندھن کی کھپت کا نصف سے زیادہ بجلی پیدا کرنے کے لیے استعمال ہوگا یہاں تک کہ عالمی رہنما ہوا اور دیگر قابل تجدید ذرائع سے بجلی پیدا کرنے کا فیصلہ کریں۔ ہوا اور قابل تجدید بجلی کی پیداوار کے بغیر کاربن ڈائی آکسائیڈ کا اخراج شدت اختیار کر جائے گا: 30 فیصد سے بھی زیادہ۔

‘ریو+20′ عالمی اجلاس سے چند روز قبل، دنیا بھر میں ہزاروں شہری ہوائی توانائی کی قوت کو دریافت کریں گے 15 جون کو 50 سے زائد انجمنیں ‘عالمی یوم ہوا’ منانے کے لیے متحد ہوں گی، جبکہ شہری ہوا سے بجلی پیدا کرنے کی حمایت میں شامل ہوں گے۔ گزشتہ سال 40 ممال میں 230 سے زائد تقریبات منعقد ہوئیں، جن میں ونڈ فارم کے دورے، کھلے کنسرٹس اور عوامی مباحثے شامل تھے۔

اس سال، عالمی یوم ہوا سے قبل، 65 ممالک کے 2300 افراد نے ہوائی بجلی کے تصویری مقابلے میں حصہ لیا، جن کا ایک شریک انٹارکٹیکا میں ایک سائنسی اسٹیشن پر رہتا ہے۔ عالمی یوم ہوا کے 16 سفیر، بشمول انٹرنیشنل ری نیوایبل انرجی ایجنسی (IRENA) کے ڈائریکٹر جنرل عدنان امین بھی شامل ہیں، اس سال کی تقریبات کے حامی ہیں: ہمبرگ میں ایک خیراتی دوڑ، ویمبلے، لندن میں ایک فٹ بال ٹورنامنٹ، نیوزی لینڈ میں اسکولوں میں ایک مصوری کا مقابلہ، بوسٹن، امریکہ میں “انرجی ویک 2012ء” اور آسٹریا میں پون چکیوں پر چڑھ کر ان سے بذریعہ رسی “اترنا” کی شاندار مہم ۔۔۔

مزید معلومات کے لیے:

گلوبل ونڈ ڈے ویب سائٹ:

http://www.globalwindday.org

یورپین ونڈ انرجی ایسوسی ایشن (EWEA):

http://www.ewea.org

گلوبل ونڈ انرجی کونسل:

http://www.gwec.net

 ذریعہ: ای ڈبلیو ای اے یورپین ونڈ انرجی ایسوسی ایشن

Leave a Reply